ترکی زلزلہ : ہلاکتوں‌کی تعداد میں اضافہ جاری

ترکی میں ہولناک زلزلے سے ہلاکتوں کی تعداد 81 ہوگئی جب کہ ملبے سے ایک بچی کو تین روز بعد زندہ نکال لیا گیا۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق تین سالہ بچی کو ازمیر شہر میں تباہ ہونے والی ایک بلڈنگ کے ملبے سے زندہ ریسکیو کیا گیا۔

ریسکیو حکام کا کہنا ہےکہ بچی تقریباً 65 گھنٹے تک ملبے تلے دبی رہی خوش قسمتی سے زندہ رہی تاہم اس کے ساتھ ہی بچی کی والدہ اور ایک اور بچے کو نکالا گیا جو مردہ حالت میں تھے۔

ریسکیو حکام کےمطابق زلزلے میں اب تک کل 81 ہلاکتوں کی تصدیق ہوچکی ہے جن میں سے صرف 79 ہلاکتیں ازمیر شہر میں ہوئیں اور 2 لاشیں جزیرے ساموس سے نکالی گئی ہیں۔

ریسکیو حکام کا کہنا ہےکہ شہر میں جمعہ کو آنےوالے زلزلے کے بعد امدادی کارروائیاں مسلسل جاری ہیں جب کہ یہ زلزلہ ترکی میں تقریباً ایک دہائی کے دوران آنے والا خطرناک زلزلہ ہے۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق زلزلے میں تقریبا 950 سے زائد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں اور بے گھر ہونے والوں کو 3500 سے زائد خیموں میں ٹھہرایا گیا ہے۔
اسپتال حکام کا کہنا ہےکہ زلزلے کے نتیجے میں زخمی ہونے والے 700 سے زائد افراد کو طبی امداد کے بعد فارغ کردیا گیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں