کشمیری عوام سے اظہارِ یکجہتی ، پارلیمنٹ ہاؤس کی عمارت کو کشمیر کے رنگوں سے بھر دیا گیا

بھارتی لاک ڈاون اورمتنازعہ علاقہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرکے ہندوستان کا حصہ قراردینے کے خلاف کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے آج پانچ اگست کو یوم استحصال منایا جائے گا۔

اسی حوالے سے گزشتہ روز کشمیری عوام سے یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے پارلیمنٹ ہاؤس کی عمارت کو کشمیر کے رنگوں سے بھرا گیا. اور پہلی بار بھارتی مظالم کو پارلیمنٹ ہاؤس پر3ڈی پروجیکشن سے دکھایا گیا

تفصیلات کے مطابق معاون خصوصی زلفی بخاری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ مقبوضہ کشمیر کےعوام سے اظہار یکجہتی کیلئے پارلیمنٹ ہاؤس کی عمارت کو کشمیرکےرنگوں سے بھرا گیا
زلفی بخاری کا کہنا تھا دنیا غیرمسلح اور بے گناہ کشمیریوں پر بھارتی مظالم کا عکس دیکھے گی، پہلی بار بھارتی مظالم کو پارلیمنٹ ہاؤس پر3ڈی پروجیکشن سے دکھایا جا رہا ہے. جو گزشتہ رات 9 بجے دکھایا گیا. پارلیمنٹ ہاؤس کی دیوارپر’’اینڈ کشمیرسیج ‘‘بھی نمایاں کیا گیا
اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے کشمیر کی آواز بننے کا اعلان کیا اور مظلوم وادی کا مقدمہ بھرپور انداز میں لڑنے کے لئے سفیر کشمیر بھی بنے۔
پانچ اگست 2019 تاریخ کاوہ سیاہ دن جب مودی حکومت نے مقبوضہ کشمیر کوخصوصی حیثیت دینے والے آرٹیکل ختم کر کے کشمیریوں پر زندگی تنگ کردی تھی، ایسے وقت جب کشمیریوں کوایسے رہنما کی ضرورت تھی جو اُن کامسئلہ اقوام عالم کے سامنے رکھتا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں