پنجاب پولیس میں تبادلے

پنجاب پولیس میں بڑے پیمانے پر اعلیٰ افسران کے تبادلے کردیے گئے۔
پنجاب کے 24 ایس ایس پیز اور ایس پیز سمیت 9 ڈی آئی جی سطح کے افسران کے بھی تبادلے کیے گئے ہیں جن کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے۔

اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کےمطابق ڈی آئی جی بلال صدیق کمیانہ،اختر عباس، شوکت عباس، ڈی آئی جی رائے بابر سعید، ہمایوں بشیر تارڑ اور انکسار خان کی خدمات وفاق کے سپرد کردی گئی ہیں جب کہ ایس ایس پی لیاقت ملک، اکبر ناصر خان اور ذیشان اصغر بھی اسٹیبلشمنٹ ڈویژن اسلام آباد میں رپورٹ کریں گے۔
دوسری جانب آئی جی پنجاب انعام غنی نے ایس ایس پی اور ایس پی عہدے کے 24 افسروں کے تبادلے کردیے۔
نوٹیفکیشن کے مطابق ایس ایس پی انویسٹی گیشن لاہور ذیشان اصغر کو سینٹرل پولیس آفس اور ان کی جگہ عبدالغفار قیصرانی کو ایس ایس پی انویسٹی گیشن تعینات کردیا گیا جب کہ زاہد نواز مروت کے تربیتی کورس پر جانے کی وجہ سے عمران کشور کو ڈی پی او قصور لگا دیا گیا۔
صاحبزادہ بلال عمر ایس ایس پی آپریشنز سی ٹی ڈی پنجاب، مس ہما نصیب ایس پی ہیڈکوارٹر ملتان، محمد ظفرسی ٹی او ملتان، زونیرہ اظفر ایس پی سیکیورٹی راولپنڈی، سلیم خان نیازی بٹالین کمانڈر تھری پی سی ملتان، خرم شہزاد ایس ایس پی انٹیلی جنس اسپیشل برانچ پنجاب مقرر کیے گئے ہیں۔
اس کے علاوہ محمد عمران ایس پی انویسٹی گیشن سیالکوٹ، محمد اکمل ڈپٹی ڈائریکٹر ایلیٹ فورس پنجاب، محمد اشرف ایس پی انویسٹی گیشن ٹو ، فراز احمدایس پی آپریشنز سٹی لاہور ، تصور اقبال ایس پی آپریشنز گوجرانوالہ، حفیظ الرحمنٰ بگوی ایس پی آپریشنز صدر لاہور تعینات کر دیے گئے۔
سید غضنفر علی شاہ اے آئی جی آپریشنز جنوبی پنجاب، عمران رزاق ایس پی انویسٹی گجرات، غلام مصطفیٰ گیلانی ایس پی انویسٹی گیشن حافظ آباد، محمد بلال ایس پی انویسٹی گیشن ماڈل ٹاؤن لاہور، اسد مظفر اے آئی جی مانیٹرینگ انویسٹی گیشن برانچ، ڈاکٹر فہد احمد بٹالین کمانڈر 5 پی سی لاہور اور عبدالوہاب ایس پی انویسٹی گیشن اقبال ٹاؤن لاہور تعینات کر دیے گئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں