گرین الیکٹرک بس اب جلد چلائی جائیں‌ گی

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے گرین الیکٹرک بسیں چلانے کی منظوری دے دی، اسموگ کے سدباب کے لیے وہیکلز سرٹیفکیشن سسٹم فعال کرنے کا بھی فیصلہ کرلیا گیا ہے
تفصیلات کے مطابق گرین الیکٹرک بسیں چلانے کی منظوری اور اہم فیصلہ وزیراعلیٰ پنجاب کی زیر صدارت ٹرانسپورٹ سے متعلق اجلاس میں کیا گیا، جس میں کہا گیاکہ الیکٹرک بسیں چلانے کے لیے ضروری امور جلد طے کرنے کی ہدایت کردی گئی۔
پنجاب میں ٹرانسپورٹ انسپکٹرز اور سب انسپکٹرزاور سارجنٹس کی بھرتی کی منظوری دی گئی جبکہ اورنج لائن ٹرین کے روٹ اسٹیشن پر صفائی کے انتظامات بہتر کرنے کی بھی ہدایت کردی گئی ہے۔
وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کا کہنا ہے کہ لاہورٹرانسپورٹ کمپنی کو پنجاب ٹرانسپورٹ کمپنی میں بدل دیاجائے گا، لاہور میں 103 کلومیٹر طویل 6 روٹس پرالیکٹرک بسیں چلائی جائیں گی، محکمہ ٹرانسپورٹ تمام آپشز کا جائزہ لے کر سفارشات پیش کرے، دیگر شہروں میں بھی الیکٹرک بسیں چلائی جائیں گی۔
انہوں نے کہا کہ میٹرو ٹرین اور اسٹیشنز پر صفائی سے متعلق کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔
عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ سرپرائز وزٹ کرکے اورنج لائن کے انتظامات کا خود جائزہ لوں گا، کوہ سلیمان میں پہلی مرتبہ پبلک ٹرانسپورٹ چلائی جائے گی، فیصل آباد اور دیگر ڈویژن میں جدید ترین بسیں چلائی جائیں گی۔
وزیراعلیٰ نے مزید کہا کہ مختلف علاقوں میں کم کرائے میں بہترین ٹرانسپورٹ فراہم کریں گے۔
جبکہ دوسری جانب وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ اسلام آباد میں 38 الیکٹرک بسوں کامنصوبہ اب ای اوآئی کی سطح پرآگیا ، رواں سال دسمبر میں وفاقی دارالحکومت میں 38 الیکٹرک بسیں چلنا شروع ہو جائیں گی
وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ اسلام آبادمیں 38 الیکٹرک بسوں کامنصوبہ اب ای اوآئی کی سطح پرآگیا، آئندہ اہم منصوبہ اسلام آباد ایئرپورٹ سےمری تک الیکٹرک ٹرین کا ہے ، منصوبےکی اسٹڈی شروع ہو گئی ہے،پلاننگ منسٹری سے اجلاس ہو چکا ہے، انشاللہ اس پراجیکٹ سے سیاحت اور سفر کامنظر بدل جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں