گوجرانوالہ میں ہونے والی مہنگی شادی کی انکوائری مکمل

فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے پاکستان کی مہنگی ترین شادی کی انکوائری مکمل کر لی۔
ذرائع کے مطابق بزنس مین کی بیٹی کی شادی کی تقریب کے لیے نجی کنٹری کلب کو 15 کروڑ روپے ادائیگی کی گئی تھی جسے 120 روز کے لیے بک کیا گیا تھا۔
شادی کے انتظامات دیکھنے والی ایونٹ مینجمنٹ کمپنی کو بھی ڈیڑھ سے 2 کروڑ روپے کی ادائیگی کی گئی جب کہ بارات ڈیکوریشن کے لیے ڈیڑھ سے 2 کروڑ روپے دیے گئے۔
ذرائع کے مطابق آتش بازی کے لیے ایک کروڑ روپے کی ادائیگی کی گئی جب کہ فوٹو گرافی اور اسٹوڈیو کے لیے 95 لاکھ روپے تک دیے گئے۔
شادی میں پرفارم کرنے والے 2 گلوکاروں کو ایک کروڑ 5 لاکھ روپے دینے کی بھی تحقیقات کی جار ہی ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ تقریب میں نکاح کے لیے مولانا کو مبینہ طورپر 10 لاکھ روپے دیے گئے۔

گوجرانوالہ کے ممتاز صنعت کار کی بیٹی کی مہنگی ترین شادی کے سوشل میڈیا پر چرچوں کے بعد ایف بی آر نے نوٹس لے لیا تھا۔ اور اس کی تحقیقات کا حکم دیا تھا جو اب مکمل ہو گئی ہیں
یہ بھی پڑھیں :مہنگی شادی پر ایف بی آر حرکت میں‌

اپنا تبصرہ بھیجیں