مروہ زیادتی کیس: 2 ملزمان گرفتارجن میں کچرا چننے والا بھی شامل

عیسیٰ نگری میں معصوم بچی مروہ کے زیادتی اور قتل کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے جس میں مزید دو ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔
ذرائع کے مطابق مروہ زیادتی و قتل کیس میں گرفتار دو ملزمان میں عبداللہ اور فیضو افغانی ہیں، ملزمان نے قومی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ بھی بنا رکھے ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہےکہ ملزم فیضو درزی اور ملزم عبداللہ کچرا چننے کا کام کرتا ہے، ملزمان مقتولہ مروہ کے علاقے میں ہی رہتے ہیں، ملزم عبداللہ پاکستانی پاسپورٹ بنوا کر برطانیہ گیا اور 7 سال وہاں مقیم رہنے کے بعد ڈی پورٹ کردیا گیا۔
یہ بھی پڑھیں‌: آخر یہ درندگی کب تک چلے گی؟
تفتیشی ذرائع کے مطابق ملزمان کے خلاف اہم شواہد ہیں، ملزم فیضو نے مروہ کو اغوا کیا اور زیادتی کی کوشش کی جب کہ ملزم عبداللہ نے مروہ کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔اور بچی کو قتل کرنے کے بعد بھی اس سے زیادتی کی گئی، مقتولہ مروہ کی لاش کو بوری میں ڈالنے سے پہلے ویسٹ کوٹ کے کپڑے میں لپیٹا گیا اور ٹرالی میں رکھ کر کچرا ڈالنے کے بعد خالی پلاٹ میں پھینکا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں