پنجاب میں اسموگ کا راج ہونے لگا ، فصلوں کی باقیات جلانے پر پابندی

پنجاب میں اب اسموگ کا راج ہونے لگا .جس کے بعد حکومت نے اسموگ کی روک تھام کے لیے فصلوں کی باقیات جلانے اور دھواں چھوڑنے والی گاڑیاں سڑکوں پر لانے پر پابندی لگا دی ہے
ریلیف کمشنر پنجاب بابر حیات تارڑ کے جاری کردہ حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ اسموگ کی روک تھام کے لیے صوبے بھر میں دھواں چھوڑنے والی گاڑیاں 31 دسمبر تک سڑکوں پر لانے کی ممانعت ہو گی۔

بابر حیات تارڑ کے جاری کردہ حکم نامے کے مطابق صوبے بھر میں فصلوں کی باقیات بھی جلانے پر پابندی ہو گی۔
حکم نامے کے مطابق دھواں چھوڑنے والی صنعتوں کے خلاف بھی کارروائی ہو گی اور اس حوالے سے ڈپٹی کمشنرز کو اختیارات سونپ دیے گئے ہیں۔
طبی ماہرین نے اسموگ کے دوران کورونا کے بڑھنے کا خدشہ بھی ظاہر کیا ہے۔ اس لیے احتیاط ضروری ہے تاکہ کسی بھی بڑے خطرے سے پہلے ہی آپ محفوظ رہیں
ذرائع کے مطابق اسموگ پر قابو پانےکے لیے دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں کو 200 روپے کے بجائے 2 ہزار روپے جرمانہ کیا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں