پی ٹی آئی حکومت کے 2 سال مکمل ، عوام کی رائے کیا ہے؟

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی حکومت 2 سال مکمل کرچکی ہے اور ان دو سالوں کی کارکردگی پر انسٹی ٹیوٹ فار پبلک اوپینین ریسرچ نے عوامی سروے کیا ہے۔

انسٹی ٹیوٹ فار پبلک اوپینین ریسرچ اور پلس کنسلٹنٹ نے رائے عامہ پر مبنی نئے سروے کے نتائج جاری کردیے ہیں۔ان دونوں سرویز میں ملک بھر سے مجموعی طور پر 4 ہزار سے زائد افراد نے حصہ لیا۔
سروے کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کی دو سالہ کارکردگی سے 54 فیصد عوام غیر مطمئن ہیں جب کہ 38 فیصد نے مطمئن ہونے کا اشارہ دیا ہے۔
پلس کنسلٹنٹ کے سروے میں بھی 45 فیصد افراد غیر مطمئن نظر آئے جب کہ 40 فیصد نے وفاقی حکومت کی کارکردگی پراطمینان کا اظہار کیا۔
ناراض افراد کی شرح میں کمی اور خوش ہونے والوں کی شرح میں اضافے کا رجحان بھی جاری ہے۔
اس کے علاوہ انسٹی ٹیوٹ فار پبلک اوپینین ریسرچ نے سروے جاری کیا ہے جس میں عوام سے پوچھا گیا تھا کہ وفاقی حکومت کے پانچ اچھے اور پانچ برے کام کون سے ہیں؟
جس میں عوام نے احساس پروگرام، اسمارٹ لاک ڈاؤن، کرپشن کے خلاف اقدامات، مسئلہ کشمیر پر مؤثر آواز اور ہر سطح پر جواب دہی کو حکومت کے بہترین کام قرار دیا۔
سروے میں عوام نے مہنگائی، بیروزگاری میں اضافہ، کابینہ میں برے ارکان کی موجودگی، کرپشن اور یوٹرن لینے پر ناپسندیدگی کا بھی اظہار کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں