کراچی میں مون سون کا پانچواں اسپیل شروع

کراچی سمیت سندھ کے مختلف شہروں میں مون سون کے پانچویں اسپیل نے بارش برسانا شروع کردی ہے
کراچی کے علاقوں صدر ، ناظم آباد، اورنگی ٹاؤن، نارتھ کراچی، یونیورسٹی روڈ ، صفورہ اور ایئر پورٹ سمیت شہر کے اکثر علاقوں میں گرج چمک کے وقفے وقفے سے بارش کا سلسلہ جاری ہے۔
اس کے علاوہ حیدرآباد، ٹھٹھہ ، نواب شاہ، میرپورخاص، تھرپارکر اور سانگھڑ میں بھی بارش ہوئی۔
کراچی کے مختلف علاقوں میں مون سون کے پانچویں اسپیل کی تیز بارش جاری ہے، پانی جمع ہونے سے شہر کی مختلف شاہراہوں پر ٹریفک کی روانی متاثر ہے۔
ایم اے جناح روڈ ،کوریڈور تھری، میٹرول پول پر ٹریفک کی روانی متاثر ہے، گرومندر، مزارقائد چورنگی، پیپلز چورنگی پر بھی ٹریفک کی روانی متاثر ہے۔
ٹریفک پولیس کے مطابق حسن اسکوائر ، راشد منہاس روڈ، نیپا کے قریب بھی ٹریفک کی روانی متاثر ہے، ٹریفک پولیس نے شہریوں سے بارش کے موسم میں سڑکوں پر احتیاط سے سفر کرنے کی اپیل کی ہے۔
اس کے علاوہ بارش ہوتے ہی کئی علاقوں میں بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی۔ کے الیکٹرک نے صبح سویرے سے ہی بن قاسم پاور پلانٹ میں خرابی کو جواز بناکر شہر بھر میں لوڈشیڈنگ میں اضافہ کردیا ہے اور بارش کے بعد تو کے الیکٹرک کو بجلی گھنٹوں بند رکھنے کا جواز مل گیا ہے۔
لوڈشیڈنگ سے سب سے زیادہ متاثرہ علاقوں میں نارتھ کراچی، اورنگی ٹاؤن، نیو کراچی، سرجانی، فیڈرل بی ایریا، لیاقت آباد، شاہ فیصل ٹاؤن، گلستان جوہر، اولڈ سٹی ایریا، لیاری،کھارادر اور پی آئی بی بھی شامل ہیں۔
کراچی میں بارش کے دوران کرنٹ لگنے کے واقعات میں شہریوں کی ہلاکت پر چیف جسٹس پاکستان نے ازخود نوٹس لیا تھا اور اس دوران چیف جسٹس نے شہر میں بدترین لوڈشیڈنگ پر کے الیکٹرک کے سی ای او کی سخت سرزنش کی تھی اور شہر میں لوڈشیڈنگ نہ کرنے کا حکم دیا تھا لیکن کے الیکٹرک نے ایک بار پھر کراچی میں لوڈشیڈنگ کا سلسلہ شروع کردیا ہے۔

محکمہ موسمیات نے آج سے پیر تک کراچی سمیت سندھ کے مختلف شہروں میں بارش کی پیش گوئی کر رکھی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں