پاکستان میں ایک دفعہ پھر کورونا کیسز بڑھنا تشویشناک ہو گیا

پنجاب کی وزیر صحت یاسمین راشد کا کہنا ہےکہ اگر کورونا کیسز بڑھتے رہے تو صورتحال قابو سے باہر ہوسکتی ہے۔
ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ سردیوں میں لوگوں کی قوت مدافعت کم ہوتی ہے اس لیےکورونا بڑھنے کے زیادہ امکانات ہیں ور اگر کورونا کیسز بڑھتے رہے تو صورتحال قابو سے باہر ہوسکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں کورونا کیسز کا بڑھنا پریشانی کی بات ہے اور اس وجہ سے مکمل لاک ڈاؤن سے معیشت کو نقصان ہوتا ہے، دیہاڑی دار طبقہ متاثر ہوتا ہے لہٰذا غریب ممالک مکمل لاک ڈاون برداشت نہیں کرسکتے۔
پاکستان میں گزشتہ ایک ہفتے سے کورونا کیسز میں اضافہ ہورہا ہے اور ایک ہفتے کے دوران کورونا کیسز مثبت آنے کی شرح 2.5 فیصد رپورٹ کی جارہی ہے جب کہ اموات میں بھی 140 فیصد تک اضافہ ہوا ہے۔
وفاقی وزیر اسد عمر نے کورونا کیسز بڑھنے پر عوام سے ایس او پیز پر عمل کرنے کی اپیل کی ہے اورکورونا وبا سے نمٹنے کیلئے قائم نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) نے کہا ہے کہ ضابطہ کار پر عمل نہیں کیا توپھر سے لاک ڈاؤن اور انڈسٹریز کو بند کرنا پڑسکتا ہے۔
اس کے لیے ضروری ہے کہ عوام ایس او پیز پر عمل کریں‌. اور مکمل احتیاط کریں . تاکہ اس وبا سے جلد چھٹکارا پایا جاسکے

اپنا تبصرہ بھیجیں