وزیراعلیٰ پنجاب کی لاہور پر اب خصوصی توجہ ہو گی

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے لاہور کے معاملات خود دیکھنے کا اعلان کردیا۔ ہے
وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں شہر کے مسائل حل کرنے کے لیےکمیٹی تشکیل دی گئی، کمیٹی کا اجلاس ہر 15 دن کے بعد ہو گا اور متعلقہ محکمے رپورٹ پیش کریں گے۔
وزیراعلیٰ پنجاب نے لاہور میں پارکنگ کے مسائل حل کرنے کے لیے پلاننگ اور اوور چارجنگ کے سدباب کا حکم دیا جب کہ گداگری کے سدباب، میٹرو برج اورانڈرپاسز کے قریب منشیات کے عادی افراد کے خلاف کریک ڈاؤن کا بھی حکم دیا۔
اجلاس میں ماحولیاتی تحفظ کے لیے دھواں چھوڑتی گاڑیوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی کا فیصلہ کیا گیا جب کہ وزیراعلیٰ نے لاہور میں غیر منظور شدہ ہاؤسنگ سوسائٹیوں کے خلاف قانونی کارروائی کرنے کی ہدایت کی ہے۔
اس موقع پر عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ اب لاہور کے معاملات دیکھنے کے لیے میں خود نکلوں گا اور چیک کروں گا۔
انہوں نے ہدایت کی کہ جلوبٹرفلائی پارک، استنبول چوک اور دیگر مقامات کی تزئین و آرائش کے پراجیکٹ تیار کیے جائیں۔
دوسری جناب مسلم لیگ ن پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے وزیراعلیٰ پنجاب کے اعلان پر ردعمل میں کہا ہے کہ بزدار صاحب خدارا لاہور کی جان چھوڑ دیں، لاہور کو حفاظت کے لیے روبوٹ اور چابی والے کھلونوں کی ضرورت نہیں۔
عظمیٰ بخاری کا کہنا تھا کہ عمران نیازی لاہوریوں سے اپنی شکست کا بدلہ لے رہے ہیں، عثمان بزدار کا مشن ہے کہ لاہور کو آثار قدیمہ میں تبدیل کیا جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں