کوئٹہ میں دہشت گردی کا بڑا منصوبہ ناکام، 4 دہشت گرد ہلاک

کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ نے بلوچستان کے علاقے مستونگ میں کارروائی کرتے چار دہشت گردوں کو ہلاک کردیا ہے۔
سی ٹی ڈی حکام کے مطابق مستونگ کے علاقے دشت میں دہشت گردوں کے ٹھکانے کا محاصرہ کیا گیا تو دہشت گردوں نے اہلکاروں پر فائرنگ کردی، جوابی فائرنگ کے نتیجے میں چار دہشت گرد مارے گئے۔
سی ٹی ڈی حکام کے مطابق دہشت گردوں کی فائرنگ سے دو اہلکار بھی زخمی ہوئے، جنہیں طبی امداد کے لئے قریبی اسپتال منتقل کردیا گیاہے، مارے گئے دہشت گردوں کے قبضے سے خودکش جیکٹس، بھاری مقدار میں اسلحہ اور دھماکاخیز مواد برآمد کیا گیا ہے۔

وزیرداخلہ بلوچستان ضیالانگو کا واقعے سے متعلق کہنا تھا کہ سی ٹی ڈی نے آج کالعدم جماعت کےچار دہشت گرد مارے، ان دہشت گردوں میں کمانڈرعبدالکریم بھی شامل ہے جو لشکر جھنگوی کا اہم کمانڈر رہا ہے، لشکر جھنگوی کا یہ اہم کمانڈراپنےساتھ تیس لوگوں کو لے کر آیا تھا۔
وزیرداخلہ بلوچستان کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے کچھ دہشت گردوں کو پکڑا تھا، انہوں نےاس گروہ کاانکشاف کیا تھا، ہم کہہ چکےتھےکوئٹہ میں تھریٹ موجود ہے، لہذا اپوزیشن کوئٹہ میں ہونے والاجلسہ منسوخ کرے۔

پہلے بھی گذشتہ ماہ کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) نے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں کارروائی کرتے ہوئے کالعدم تنظیم کے اہم رکن کو گرفتار کیا تھا، سی ٹی ڈی کا حکام کے مطابق ملزم نے دوران حراست سریاب میں قتل، ڈبل روڈ پر بینک ڈکیتی کا بھی اعتراف کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں