5 مصری خواتین کو سوشل میڈیا پر نازیبا مواد ڈالنا مہنگا پڑ گیا

مصر میں سوشل میڈیا پر 5 خواتین نازیبا ویڈیوز پوسٹ کرنے کے جرم میں گرفتار کر لی گئی. جس کے بعد انہیں دو سال قید اور تین لاکھ مصری پاؤنڈ جرمانے کی سزا سنا دی گئی ہے
غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مصری عدالت نے خواتین کو سوشل میڈیا پر مصری معاشرے کی اقدار اور روایات پامال کرنے اور نازیبا ویڈیوز سے عوامی جذبات مجروح کرنے کے جرم میں سزا سنائی ہے۔

ذرائع کے مطابق پانچوں خواتین سوشل میڈیا ایپس ٹک ٹاک اور انسٹاگرام پر اپنی ویڈیوز پوسٹ کرتی تھیں۔ جو کہ اخلاق سے گری ہوئی تھی. اور معاشرے میں ان کا منفی اثر ہو رہا تھا . جس وجہ سے ایسا کیا گیا .اور ایسا مصر میں‌پہلی دفعہ ہی ہوا ہے کہ مصر میں سوشل میڈیا پوسٹس پر خواتین کو سزا سنائی گئی ہے۔ اس طرح اب آنے والے وقت میں‌وہ لوگ اس طرح‌عمل کرنے سے پہلے سوچیں گے کہ ایسا کرنا ان کے لیے مشکل نہ بنا دے

اپنا تبصرہ بھیجیں