سوات اور کوہستان میں سیلابی ریلے نے تباہی مچا دی

سوات اور کوہستان میں سیلابی ریلوں نے تباہی مچا دی ہے، 17 افراد ریلے میں بہہ گئے جس میں سے 9 افراد کی لاشیں نکال لی گئی ہیں جب کہ دیگر کی تلاش جاری ہے۔

ڈپٹی کمشنر سوات ثاقب رضا اسلم کے مطابق مدین میں شاہ گرام اور تیرات نالے میں طغیانی سے کئی مکانات بہہ گئے ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ نالوں میں طغیانی کے باعث 40 مکانات اور رابطہ پلوں سمیت دیگر املاک کو بھی شدید نقصان پہنچا۔

ڈی سی سوات نے 17 افراد ریلے کے پانی کے ریلے میں بہہ جانے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ 6 افرادکی لاشیں نکال لی گئی ہیں جب کہ 11کی تلاش اور علاقے میں امدادی کارروائی جاری ہیں۔

کوہستان کے دور افتادہ گاؤں لائچی نالے میں اُونچے درجے کے سیلاب نے تباہی مچادی ہے اور سیلاب میں ایک ہی خاندان کے سات افراد سیلاب میں بہہ گئے۔
کوہستان پولیس کے مطابق اب تک تین خواتین کی لاشیں مل گئی ہیں جب کہ بچوں سمیت 4 افراد ابھی تک لاپتہ ہیں۔

ادھر چلاس میں شاہراہ قراقرم پر تتہ پانی سے لال پڑی کے درمیان لینڈ سلائیڈنگ سے کئی گاڑیوں کو نقصان پہنچا اور پہاڑی تودہ گرنے سے ٹینکر کا ڈرائیور جاں بحق ہو گیا۔
شاہراہ قراقرم پر لینڈ سلائیڈنگ کے باعث آمدروفت معطل ہو گئی ہے، شاہراہ بند ہونے سے مقامی افراد اور سیاح دونوں جانب پھنس گئے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں