پاک افغان بارڈر پر سرحد پار فائرنگ سے لانس نائیک سمیع اللہ شہید ہو گئے

پڑوسی ملک افغانستان نے پاک افغان بارڈر پر فائرنگ کی . جس کے نتیجے میں ایک فوجی جوان شہید ہو گیا۔
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر نے کہا ہے کہ پاک افغان بارڈر پر سرحد پار سے فائرنگ کی گئی ہے جس کے نتیجے میں لانس نائیک سمیع اللہ شہید ہو گئے ہیں‌
آئی ایس پی آر کے مطابق پاکستان نے بیمار افغان فوجی کا علاج کیا لیکن اس کے جواب میں افغانستان نے پاکستان کا ایک جوان شہید کر دیا ہے، اور دونوں ممالک کی دوستی کو خاک میں ملا دیا . فوجی جوان سرحد پار سے پاکستان کے علاقے باجوڑ میں‌ تھا جہاں وہ فائرنگ سے شہید ہوا۔
گزشتہ روز آئی ایس پی آر نے کہا تھا کہ پاکستان نے افغان فوجی حکام کی درخواست پر ایک افغان فوجی جوان کا پاکستان میں علاج کر کے انسانیت کی اعلیٰ مثال قائم کی تھی، آئی ایس پی آر کے مطابق افغانستان کے اعلیٰ حکام نے پاکستانی عسکری قیادت سے اپنے متاثرہ فوجی جوان کا پاکستان میں علاج کرنے کی درخواست کی تھی۔

پاکستانی حکام نے افغان فوجی حکام کی درخواست قبول کرتے ہوئے ایک افغان فوجی جوان کا راولپنڈی میں واقع سی ایم ایچ اسپتال میں علاج کیا، افغان فوجی صحت یاب ہونے کے بعد طور خم بارڈر کے ذریعے افغانستان واپس روانہ ہو گیا تھا

اپنا تبصرہ بھیجیں